Global Economy

عالمی معیشت: شرح سود میں اضافے کے باوجود گہرا ہوتا بحران

عالمی معیشت: شرح سود میں اضافے کے باوجود گہرا ہوتا بحران

|تحریر: نکلس البن سوینسن، ترجمہ: ولید خان| پچھلے چند مہینوں میں کئی ممالک کے مرکزی بینکوں نے افراط زر کو کنٹرول کرنے کے لئے تیزی سے شرح سود میں اضافہ کیا ہے۔ پرسوں فیڈرل ریزرو (امریکی مرکزی بینک) نے شرح سود میں 0.75 فیصد اضافہ کیا اور گزشتہ روز بینک […]

November 4, 2022 ×
دنیا بھر میں تیل اور گیس کا بحران: سرمایہ داروں کی منافع خوری، محنت کشوں کی ذلت

دنیا بھر میں تیل اور گیس کا بحران: سرمایہ داروں کی منافع خوری، محنت کشوں کی ذلت

|تحریر: جو اٹارڈ، ترجمہ: یار یوسفزئی| سرد موسمِ سرما کی آمد ہے۔ نیٹو اور روس کے سامراجی تصادم کا پورا بوجھ محنت کشوں اور غریبوں کے اوپر پڑ رہا ہے جو اس کی قیمت آسمان کو چھوتے بلوں اور ٹھنڈے گھروں کی صورت چکا رہے ہیں، جبکہ مٹھی بھر گیس […]

October 9, 2022 ×
سرمایہ داری کا گہرا ہوتا بحران، بڑھتا افراط زر اور شرح سود؛ متوقع دیوالیے اور معاشی تباہی

سرمایہ داری کا گہرا ہوتا بحران، بڑھتا افراط زر اور شرح سود؛ متوقع دیوالیے اور معاشی تباہی

|تحریر: ایڈم بوتھ، ترجمہ: ولید خان| بے قابو افراطِ زر کو کنٹرول کرنے کے لئے مرکزی بینک شرح سود بڑھا رہے ہیں اور نتیجتاً کساد بازاری جنم لے رہی ہے۔ ہر لمحہ سنگین ہوتا سرمایہ دارانہ بحران حکمران طبقے میں تقسیم کو بڑھا رہا ہے۔ ایک سوشلسٹ انقلاب ہی اس […]

October 3, 2022 ×
پوری دنیا انقلابات کے آتش فشاں کے دہانے پر آ پہنچی ہے!

پوری دنیا انقلابات کے آتش فشاں کے دہانے پر آ پہنچی ہے!

|تحریر: ول ہیز، ترجمہ: ولید خان| پچھلے مہینے ہولناک معاشی بحران میں گھری سری لنکن عوام نے دارالحکومت کولمبو میں صدارتی محل پر دھاوا بول دیا جس کے بعد عوامی نفرت کا شکار گوٹا راجاپکشا دُم دبا کر بھاگ گیا اور کچھ ہی دنوں بعد اس نے استعفے کا اعلان […]

August 15, 2022 ×
بڑھتی مہنگائی، معاشی جمود اور طبقاتی جدوجہد: عالمی سرمایہ داری کا نیا عہد

بڑھتی مہنگائی، معاشی جمود اور طبقاتی جدوجہد: عالمی سرمایہ داری کا نیا عہد

|تحریر: راب سیول، ترجمہ: یار یوسفزئی| جنگ، وباء اور تحفظاتی پالیسیوں کے مسلسل طوفان میں گھِر کر عالمی معیشت شدید ہنگاموں کی لپیٹ میں آ چکی ہے۔ مہنگائی اور کساد بازاری کا خطرناک ملاپ سرمایہ داری کے سر پر منڈلا رہا ہے۔ یہ حالات ہر جگہ پر انقلابی سماجی دھماکوں […]

July 1, 2022 ×
2021ء کی سٹہ بازی اور دیوہیکل مالیاتی بحران کا امکان

2021ء کی سٹہ بازی اور دیوہیکل مالیاتی بحران کا امکان

|تحریر: بین کری، ترجمہ: ولید خان| سال 2020ء میں مرکزی بینکوں نے کورونا وباء کے نتیجے میں گھمبیر ہوتے معاشی بحران کا مقابلہ کرنے کے لئے 10 ٹریلین ڈالر چھاپ کر منڈی میں جھونک دیئے۔ پیسوں کی اس تاریخی بارش پر منڈیوں نے کس ذمہ داری اور متانت کا ثبوت […]

February 19, 2022 ×
مہنگائی، عدم استحکام اور بغاوتیں: عالمی سرمایہ داری کا ’نیا معمول‘

مہنگائی، عدم استحکام اور بغاوتیں: عالمی سرمایہ داری کا ’نیا معمول‘

|تحریر: فریڈ ویسٹن، ترجمہ: یار یوسفزئی| کرونا وباء نے پہلے سے موجود سرمایہ دارانہ بحران کو مزید تیز اور گہرا کر دیا ہے۔ آج ہمیں دہائیوں کے سب سے گہرے سماجی، معاشی اور سیاسی بحران کا سامنا ہے۔ کچھ حد تک معاشی بحالی کے باوجود، پچھلے عرصے میں سرمایہ داروں […]

February 18, 2022 ×
یورپ اور امریکہ میں مزدوروں کی قلت: سرمایہ دارانہ انتشار کا ایک اور اظہار

یورپ اور امریکہ میں مزدوروں کی قلت: سرمایہ دارانہ انتشار کا ایک اور اظہار

|تحریر: ڈیلن کوپ، ترجمہ: ولید خان| اس وقت پوری دنیا میں صنعتوں کو مزدوروں کی شدید قلت کا سامنا ہے جس سے پیداوار منجمد ہو گئی ہے اور سپلائی چینز برباد ہو رہی ہیں۔ سرمایہ دارانہ منڈی کا مطلب انتشار اور بحران ہے۔ صرف ایک سوشلسٹ منصوبہ بند معیشت ہی […]

October 26, 2021 ×
پینڈورا پیپرز: حکمران طبقے کے غلیظ مالیاتی ہیر پھیر ایک بار پھر بے نقاب

پینڈورا پیپرز: حکمران طبقے کے غلیظ مالیاتی ہیر پھیر ایک بار پھر بے نقاب

|تحریر: مینن پاؤری، ترجمہ: یار یوسفزئی| لاکھوں دستاویزات پر مشتمل 2.94 ٹیرا بائیٹس کا ڈیٹا لیک ہونے کے باعث 100 سے زائد ارب پتی، عالمی قائدین اور سرکاری عہدیداران کے بیرونِ ملک معاہدے اور اثاثے بے نقاب ہوئے ہیں۔ اس ڈیٹا سے حکمران طبقے کی دیوہیکل خونخواری کا پردہ چاک […]

October 10, 2021 ×
2020ء: امیروں کی چاندی، محنت کشوں کی بربادی

2020ء: امیروں کی چاندی، محنت کشوں کی بربادی

|تحریر: مینن پاؤری، ترجمہ: یار یوسفزئی| کریڈٹ سوِیس کی ایک نئی انکشافاتی رپورٹ سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ سال 2020ء کے اندر کروڑ پتی افراد کی تعداد میں ڈرامائی اضافہ ہوا ہے جبکہ دولت کی نابرابری بڑے پیمانے پر شدید ہونے کی طرف گئی ہے، اس کے باوجود […]

August 27, 2021 ×
بڑھتا ہوا افراطِ زر اور سرمایہ داروں کے بے اثر حربے

بڑھتا ہوا افراطِ زر اور سرمایہ داروں کے بے اثر حربے

|تحریر: ایلیساندرو گیاردیلو، ترجمہ: یار یوسفزئی| کرونا وباء کے اثرات نے 2008ء میں شروع ہونے والے زائد پیداوار کے بحران کو شدید تر کر دیا ہے، جس کے باعث سرمایہ دارانہ نظام کے تضادات میں بھی شدت آئی ہے۔ نتیجتاً، بڑے سامراجی ممالک کی پالیسیوں کے اندر بڑی تبدیلیاں وقوع […]

August 2, 2021 ×
G7 سربراہی اجلاس: زوال پذیر سامراجی طاقتوں کا انتشار

G7 سربراہی اجلاس: زوال پذیر سامراجی طاقتوں کا انتشار

|تحریر: ڈینیئل مورلے، ترجمہ: ولید خان| حالیہ G7 اقوام کے اجلاس کو امریکہ اور اس کے اتحادیوں کی عالمی سٹیج پر واپسی اور چین کے ابھار کو روکنے کی کوشش قرار دیا جا رہا تھا، اس حوالے سے اس اجلاس کی کافی چرچا کی گئی۔ لیکن تمام تر دعووں کے […]

June 23, 2021 ×
عالمی معیشت میں افراطِ زر اور عدم استحکام۔۔بڑھتے تضادات میں دھنستی سرمایہ داری

عالمی معیشت میں افراطِ زر اور عدم استحکام۔۔بڑھتے تضادات میں دھنستی سرمایہ داری

|تحریر: آدم بوتھ، ترجمہ: ولید خان| پچھلے سال پوری دنیا میں حکومتوں نے حیرت انگیز ریاستی امداد کے ذریعے لرزتی سرمایہ داری کو قائم رکھا۔ لیکن ان ہیجانی اقدامات نے عالمی معیشت کی بنیادوں میں بارود بھر دیا ہے۔ اس بارود کے پھٹنے کا وقت آ گیا ہے۔ آج سے […]

June 20, 2021 ×
سٹاک ایکسچینج کے جوئے میں نئے کھیل اور سرمایہ داری کا پاگل پن

سٹاک ایکسچینج کے جوئے میں نئے کھیل اور سرمایہ داری کا پاگل پن

|تحریر: نیلسن وان، ترجمہ: ولید خان| کورونا وباء کی تباہی کے دوران بھی معیشت کے کچھ حصے نہال ہیں۔ سٹے باز سرمایہ کاری دیوانہ وار جاری ہے۔ مشہور شخصیات کے ہر لمحہ تبدیل ہوتے وقتی فیشن، NFTs اور SPACs اس دیوانہ وار سٹہ بازی کے حالیہ اظہار ہیں۔ انگریزی میں […]

April 7, 2021 ×