Post Tagged with: "Taliban"

نائن ایلیون کے بیس سال: شکست خوردہ امریکی سامراج اور بکھرتا ورلڈ آرڈر

نائن ایلیون کے بیس سال: شکست خوردہ امریکی سامراج اور بکھرتا ورلڈ آرڈر

|تحریر: حمید علی زادے، ترجمہ: یار یوسفزئی| بیس سال قبل آج کے دن، امریکہ نے اپنی جدید تاریخ میں اپنے اوپر سب سے بڑا اور خونریز حملہ ہوتے ہوئے دیکھا۔ دہشتگرد گروہ نے نیویارک میں واقع ورلڈ ٹریڈ سینٹر کی عمارتوں پر دو مسافر طیاروں کے ذریعے حملہ کیا، جس […]

September 11, 2021 ×
”اپنے لوگ“

”اپنے لوگ“

|تحریر: صبغت وائیں | بہت سے لوگ کہہ رہے ہیں کہ ”وہ“ ”ان“ کے ”اپنے لوگ“ ہیں اس لیے ہم کو ان کے بارے میں زیادہ فکرمند ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ اور ادھر ہم ہیں کہ سوچے جا رہے ہیں کہ جن کو بھگتتے ہوئے ہم کو تیس بتیس […]

August 18, 2021 ×
افغانستان: امریکی سامراج کی ذلت آمیز شکست، سفاکی اور فرار

افغانستان: امریکی سامراج کی ذلت آمیز شکست، سفاکی اور فرار

|تحریر: حمید علی زادے، ترجمہ: ولید خان| امریکی تاریخ کی سب سے طویل جنگ کا خاتمہ امریکی سامراج کی شرمناک اور ذلت آمیز شکست کی صورت میں ہو چکا ہے۔ افغانستان پر فوج کشی کے بیس سال بعد انسانی تاریخ کی طاقتور ترین عسکری قوت پسماندہ مذہبی انتہاء پسندوں کے […]

August 17, 2021 ×
اداریہ: افغانستان کی خانہ جنگی اور انقلابی حل

اداریہ: افغانستان کی خانہ جنگی اور انقلابی حل

افغانستان میں امریکی سامراج اور اس کے اتحادیوں کی ذلت آمیز شکست کے بعد صورتحال پھر ایک خانہ جنگی اور خونریزی کی جانب بڑھ چکی ہے۔ خطے کی امریکہ مخالف سامراجی قوتوں کی پشت پناہی سے طالبان کی رجعتی اور عوام دشمن قوت دو دہائیوں بعد پھر سے بے گناہوں […]

August 14, 2021 ×
ثور انقلاب کے 43 سال اور آج کا افغانستان

ثور انقلاب کے 43 سال اور آج کا افغانستان

|تحریر: زلمی پاسون| 43 سال پہلے افغانستان کے انتہائی پسماندہ نیم جاگیردارانہ اور نیم سرمایہ دارانہ سماج میں ایک تاریخ ساز واقعہ رونما ہوا جسے ثور انقلاب کے نام سے یاد کیا جاتا ہے۔ افغانستان میں 27 اپریل 1978ء کو رونما ہونے والے ثور انقلاب کو اس خطے کی تاریخ […]

April 26, 2021 ×
کیا افغان امن مذاکرات واقعی مسئلے کا حل ہے؟

کیا افغان امن مذاکرات واقعی مسئلے کا حل ہے؟

|تحریر: زلمی پاسون| چھ ماہ کی تاخیر کے بعد افغان حکومت اور طالبان کے مابین بین الافغانی مذاکرات کا افتتاحی اجلاس 12 ستمبر کو ہفتے کے روز دوحہ میں ہوا۔ مذاکرات کے افتتاحی اجلاس میں متعدد بین الاقوامی عہدیداروں نے شرکت کی۔ آٹھ رکنی افغان وفد کی قیادت معصوم ستانکزئی […]

September 26, 2020 ×
سامراجی جنگ اور بنیادپرستانہ رجعت سے تڑپتا افغانستان

سامراجی جنگ اور بنیادپرستانہ رجعت سے تڑپتا افغانستان

|تحریر: زلمی پاسون| 12 مئی کو افغانستان کے دارالحکومت کابل میں ایم ایس ایف (طبیانِ بے سرحد) کے سو بیڈ پر مشتمل ہسپتال کے زچہ بچہ وارڈ پر دہشت گردوں کے حملے کے نتیجے میں اب تک کی اطلاعات کے مطابق 16 معصوم بچے، خواتین اور دیگر افراد لقمہ اجل […]

May 18, 2020 ×
افغان امن معاہدہ؛ سامراجی ڈھونگ اور مظلوم عوام

افغان امن معاہدہ؛ سامراجی ڈھونگ اور مظلوم عوام

|تحریر: زلمی پاسون| 29 فروری کو قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امریکی حکام اور طالبان کے نمائندوں کے درمیان مذاکرات کے اٹھارہ مہینوں کے بعد ایک تحریری معاہدے پر دستخط ہوئے۔ اس معاہدے کا مقصد امریکی سامراج کی طرف سے مسلط کردہ طویل ترین جنگ کا خاتمہ قرار دیا جاتا […]

March 4, 2020 ×
افغانستان: امریکی سامراج کی پسپائی اور طاقتوں کا بدلتا توازن

افغانستان: امریکی سامراج کی پسپائی اور طاقتوں کا بدلتا توازن

2001ء میں جب امریکی سامراج نے اپنے اتحادیوں کے ساتھ مل کر افغانستان پر حملہ کیا تھا اس وقت اس کی کیفیت ایک طاقت کے نشے میں بد مست ہاتھی جیسی تھی جو اپنے مذموم مقاصد کے لیے کسی بھی خطے کو تاراج کرنے کے لیے تیار تھا۔ پاکستان سمیت تمام اتحادیوں کی کاسہ لیسی اور معاونت کے باوجود آج اس سامراج کی کیفیت ایک دم دبا کر بھاگتے ہوئے گیدڑ جیسی نظر آتی ہے

January 9, 2019 ×
افغانستان: عالمی اور علاقائی سامراجیت کا خونی اکھاڑہ!

افغانستان: عالمی اور علاقائی سامراجیت کا خونی اکھاڑہ!

|تحریر: زلمی پاسون| افغانستان گزشتہ 40 سالوں سے عالمی اور علاقائی سامراجیوں کے سامراجی عزائم کی وجہ سے ظلم و بربریت، وحشت، تباہی اور دہشت گردی کی آماجگاہ بنا ہوا ہے۔ وہاں ہر روز ظلم اور بربریت کی ایک نئی داستان رقم ہوتی ہے، جس میں ہمیشہ کی طرح مظلوم […]

November 12, 2018 ×
علی وزیر پر حملہ: ملک دشمن اور غدار کون؟

علی وزیر پر حملہ: ملک دشمن اور غدار کون؟

|تحریر: ورکر نامہ| تین جون کی شام وانا، جنوبی وزیرستان میں علی وزیر کے گھر عوام کے اکٹھ پر مسلح افراد کا حملہ قابل مذمت ہے جو واضح کرتا ہے کہ طالبان ابھی بھی ان علاقوں میں موجود ہیں اور ان کے خاتمے کا واویلا صرف جھوٹ کا پلندہ تھا۔ […]

June 4, 2018 ×